مختلف سیاسی پارٹیز کی پریس کانفرنسز اور بیانات کی بھرمار

ن لیگ والوں کو جیسے ایک دم سے احکامات جاری کیے گئے ہوں کہ ابھی کے ابھی کانفرنس کرو اور اس میں جے آئی ٹی کو نشانہ بنایا جائے
“ہمیں جے آئی ٹی پر اعتماد نہیں رہا ۔ ہمیں بتایا گیا تھا کے جے آئی ٹی کی سربراہی ایف آئی اے کر رہی ہے جبکہ حقیقت اس کے برعکس ہے مختلف ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ ایف آئی اے کی بجائے حساس ادارہ نگرانی کر رہا ہے”۔ سعد رفیق
“وازیر اعظم کے بیٹے کو جے آئی ٹی نے تفتیش کے دوران کس طرح بٹھایا یا ہے اور ان کے بیٹے کی تصویر بھی لیک کی گئی ہے یہ کس نے اور کیوں کی؟ اگر وہ شخص معلوم ہے تو اس کو پکڑ کر سزا کیوں نہیں دی گئی”۔ احسن اقبال
“اگر قطری شہزادے کا بیان ریکارڈ نہ کیا گیا توجے آئی ٹی کا فیصلہ بھی منصفانہ نہیں ہو گا قطری خط کی تصدیق نہ کرنا ناانصافی ہے”۔ خواجہ آصف
“جے آئی ٹی منصفانہ طور پر کام نہیں کر رہی جے آئی ٹی متنازع نظر آ رہی ہے”۔ مولانہ فضل الرحمان
“جے آئی ٹی کو چاِہیے کے جو بھی فیصلہ ہو عوام کے سامنے لایا جائے اور اس کو کاغذ میں بند نہیں کرنا چاہیے”۔ سراج الحق

Leave a Reply